Search
 
Write
 
Forums
 
Login
"Let there arise out of you a band of people inviting to all that is good enjoining what is right and forbidding what is wrong; they are the ones to attain felicity".
(surah Al-Imran,ayat-104)
Image Not found for user
User Name: Beena
Full Name: Sabeen Anwar
User since: 30/Jun/2009
No Of voices: 4
وہ تیرا میرا دشمن ھے ۔ بینا
Views:3626 Replies:0
Poem-Dil khoon ke aanso rota hai by Beena
Views:6674 Replies:1
جمعہ کا خطبہ - بينا
Views:5188 Replies:1
Muslims Caught in a Web by Beena
Views:2903 Replies:0

Click here to read All Articles by User: Beena

 
 Views: 5188   
 Replies: 1   
 Share with Friend  
 Post Comment  

 

 

جمعے کا خطبہ

 

اسلام ايک مکمل نظام ھے۔ مکمل نظام کا مطلب کيا ہوتا ھے۔ ايک اچھے يا مکمل نظام کی نشانی ہوتی ھے کہ وہاں ايک اچھا ريپیئرنگ سسٹم ھو يا دوسرے الفاظ ميں ايک ايسا کنٹرول سسٹم جس ميں جراثيم کی افزائش کو پھيلنے سے پہلے اور وبا بننے سے قبل ہی کنٹرول کر ليا جاۓ۔

        Ø¬Ù…عے کا خطبہ بھی معاشرے Ú©Û’ اندر پيدا ہونے والی خرابيوں پر قابو پانے Ú©Û’ ليے ايک مؤثر آلہ Ú¾Û’Û” اسلام ميں کيونکر جمعے Ú©ÛŒ نماز Ú©Ùˆ بےانتہاء اہميت حاصل Ú¾Û’Û” اس Ú©ÛŒ اہميت اور تاکيد Ú©ÛŒ وجہ یہی Ú¾Û’ کہ يہ مسلمانوں Ú©ÛŒ اجتماعيت اور اصلاح Ú©Û’ ليے  ايک پليٹ فارم مہيا کرتا Ú¾Û’Û” جمعے Ú©ÛŒ نماز Ú©Û’ بارے ميں احاديث Ú©Û’ کلام ميں بہت شدّت Ø¢"ŽØ¦ÛŒ Ú¾Û’Û” جيسے "جس Ù†Û’ تين جمعے تک نماز لگاتار نہ Ù¾Ú‘Ú¾ÛŒ اس Ú©Û’ دل پر مہر Ù„Ú¯ جاۓ Ú¯ÛŒ"Û” اسی طرح خطبے Ú©Û’ دوران خاموش رہنے Ú©ÛŒ اہميت کہ "اگر خطبے Ú©Û’ دوران کسی Ù†Û’ دوسرے Ú©Ùˆ خاموش کرانے Ú©Û’ لیے بھی بولا تو اس Ù†Û’ بھی گناہ کيا"Û” يہی وجہ Ú¾Û’ کہ ہمارے ہاں اکثر لوگوں ميں نماز Ù¾Ú‘Ú¾Ù†Û’ Ú©ÛŒ پابندی نہيں بھی ہوتی ليکن جمعہ Ú©ÛŒ نماز Ú©Û’ ليے اکثروبيشتر لوگ پہنچ جاتے ہيں۔ يعنی نماز Ú©ÛŒ پابندی کرنے والے اور نہ کرنے والے دونوں ہی اس موقع پر حاضر ہوتے ہيں۔  اور اس طرح عوام النّاس Ú©ÛŒ اصلاح Ú©Û’ ليے يہ ايک سنہری موقع ہوتا Ú¾Û’Û”

 ÛÙ…ارے ہاں قرآن Ùˆ سنّت Ú©ÛŒ روشنی پھيلانے Ú©Û’ ليے کئی تنظيميں کام کر رہی ہيں۔ مگر ان تنظيموں ميں مرد حضرات Ú©ÛŒ تعداد خاصی محدود ہے۔ اس Ú©ÛŒ ايک وجہ تو مرد حضرات Ú©ÛŒ کاروبار ميں مشغوليت Ú¾Û’Û” يا پھر وہ اس Ú©Ùˆ غير ضروری سمجھتے ہوۓ نظر انداذ کر ديتے ہيں۔ اور کوشش Ú©Û’ باوجود ايسے درس Ú©Û’ مواقع پر Ú¯Ù†Û’ Ú†Ù†Û’ لوگ ہی حاضر ہوتے ہيں۔ اس Ú©Û’ برعکس جمعے Ú©ÛŒ نماز کا وقت ايسا ہوتا ہے۔ جس ميں کاروبار بند کر ديے جاتے ہيں۔ اور لوگوں Ú©ÛŒ ايک کثير تعداد اس Ú©Ùˆ ضروری سمجھتے ہوۓ پہنچ جاتی Ú¾Û’Û”

      تنظيموں سے اس کا موازنہ کرنے کا مقصد ہرگز تنظيم Ú©ÛŒ اہميت Ú©Ùˆ Ú©Ù… کرنا نہيں۔ بلکہ وہ افراد اور جماعتيں جو معاشرے Ú©ÛŒ اصلاح Ú©Û’ خواہاں ہيں اور لوگوں ميں قرآن Ùˆ سنّت Ú©ÛŒ حقیقی سمجھہ بوجھہ پيدا کرنا چاہتے ہيں۔ ايسے لوگوں Ú©ÛŒ توجہ اس مضبوط ميڈيا Ú©ÛŒ طرف دلانا مقصود Ú¾Û’ جہاں سے ان Ú©Ùˆ اپنی کوششوں Ú©Û’ نتائج کئی گنا زيادہ مل سکتے ہيں۔ کيونکہ کسی بھی ادارے Ú©ÛŒ برانچز چند مخصوص علاقوں تک محدود ہوتی ہيں جبکہ مسجديں ہر شہر، ہر گا"Œ"""Œ"ŽØ¤ÚºØŒ ہر علاقے، ہر قصبے اور Ú¯Ù„ÛŒ Ú¯Ù„ÛŒ موجود ہيں۔

     بدقسمتی سے ہمارے ہاں جمعے Ú©Û’ خطبے کا استعمال اتنا مؤثر نہيں رہا يا دوسرے مقاصد Ú©Û’ ليے ہونے لگا۔ کہيں سياسی تقرير Ú¾Û’ تو کہيں فرقہ واريت Ú©ÛŒ بنياد ڈالی جا رہی Ú¾Û’Û” اور کہيں خطیب علم سے بےبہرہ Ú¾Û’Û”

        اگر پورے ملک ميں مسجدوں کا انتظام فرقہ واريت سے پاک اور قرآن Ùˆ سنّت کا صحيح علم رکھنے والوں Ú©Û’ ہاتھہ Ø¢ گيا تو يہی نظام پورے ملک ميں انقلاب کا سبب بن سکتا Ú¾Û’Û” مسلمانوں Ú©Ùˆ پھر سے زندہ کيا جا سکتا Ú¾Û’Û” اس گری ہوئی اخلاقی حالت Ú©Ùˆ پھر سے بدلا جا سکتا Ú¾Û’Û” قوم Ú©Ùˆ مايوسيوں سے نکالا جا سکتا Ú¾Û’Û” حق کا بول بالا ہو سکتا Ú¾Û’Û” ضرورت صرف عزم کرنے Ú©ÛŒ Ú¾Û’Û” متحد ہونے Ú©ÛŒ Ú¾Û’Û” کوشش کرنے Ú©ÛŒ Ú¾Û’Û” اور کوششوں Ú©Ùˆ مؤثر بنانے Ú©ÛŒ Ú¾Û’Û” اور سب سے بڑھ کر استقامت اور سچائی Ú©ÛŒ Ú¾Û’Û”

    ہميں چاہيے کہ ہم تمام اصلاحی پروگرامز Ú©Û’  Ù„ÙŠÛ’ ان مسجدوں Ú©Ùˆ پليٹ فارم بنائيں۔ اگر ہم اپنی تاريخ اٹھا کر ديکھيں تو مسجدوں Ú©Ùˆ وسيع تر فوائد Ú©Û’ ليے استعمال کيا گيا۔ يہ مسلمانوں Ú©Û’ منظّم ہونے Ú©ÛŒ جگہ Ú¾Û’Û” يہ قرآن Ùˆ سنّت Ú©ÛŒ تعليم دينے Ú©ÛŒ جگہ Ú¾Û’Û” يہ مسلمانوں Ú©Û’ مسائل حل کرنے Ú©ÛŒ جگہ Ú¾Û’Û”

    ہميں چاہيے کہ ہم اپنے بچوں، بھائیوں، دوستوں اور خاندان Ú©Û’ ديگر افراد Ú©Ùˆ اس ذمہ داری Ú©Û’ ادا کرنے کا احساس دلائیں۔ اگر ہم يہ سوچتے ہيں کہ ابھی اس Ú©Û’ قابل نہيں کہ امامت کروائيں يا خطبہ ديں۔ تو پھر ميری گزارش Ú¾Û’ کہ اگر ظاہری طور پر کوئی Ú©Ù…ÛŒ Ú¾Û’ تو اس بڑے مقصد Ú©Ùˆ پورا کرنے Ú©Û’ ليے وہ Ú©Ù…ÛŒ دور کريں۔ اور اگر علم ميں Ú©Ù…ÛŒ Ú¾Û’ تو قرآن Ú©ÛŒ تفاسير کا مطالعہ شروع کريں۔ اگر ہمارے اندر استقامت اور سچائی ہوئی تو يہ علم روز بروز بڑھتا جاۓ گا۔ اور مزيد راہيں کھلتی جائيں گی۔ کسی اور Ú©Û’ آنے کا انتظار نہ کريں بلکہ خود Ø¢Ú¯Û’ آئيں۔

    پس يہی وہ خدائی نظام کا پليٹ فارم Ú¾Û’ جہاں سے زوال شدہ قوم Ú©Ùˆ پھر سے اٹھايا جا سکتا Ú¾Û’Û” معاشرے ميں ايک اچھی سوچ اور فکر پيدا Ú©ÛŒ جا سکتی Ú¾Û’Û” جہاں سے خرابيوں Ú©ÛŒ بنياد سے صفائی Ú©ÛŒ جا سکتی Ú¾Û’Û” جہاں سے غفلت ميں سوۓ Ú¾ÙˆÛ“ لوگوں کا شعور جگايا جا سکتا Ú¾Û’Û”Û” مسجد جہاں لوگ دن ميں پانچ مرتبہ جمع ہوتے ہيں۔۔ جہاں جمعے Ú©Û’ دن لوگوں Ú©ÛŒ کثير تعداد اپنے کاروباری مشاغل Ú†Ú¾ÙˆÚ‘ کر جمع ہوتی Ú¾Û’Û”Û”Û” ايسے اوقات اور جگہ کا بہترين استعمال کسی بھی ميڈيا Ú©Û’ مقابلے ميں کئی گنا زيادہ مؤثر ہو سکتا Ú¾Û’Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”Û”

                                                                                                (بينا)

            

      

 

 

 Reply:   Mullah Hegemony.
Replied by(baber) Replied on (3/Jul/2009)

Its not possible to break Mullah hegemony in Jumma Khutbaas specially in Indo Pak. In Arab countries, Khutba is issued from State and if anyone dithers from the khutba, he is arrested immediately.


 
Please send your suggestion/submission to webmaster@makePakistanBetter.com
Long Live Islam and Pakistan
Site is best viewed at 1280*800 resolution